پاکستان 2 فروری سے ڈیوس کپ کی میزبانی کرے گا۔

اسلام آباد (انسہ کیانی) پاکستان اور کوریا کی ٹیمیں ڈیوس کپ ٹائی ایشیا اوشنیا زون ون میں جمعہ سے مد مقابل ہونگی ، اسلام آباد میں ڈیوس کپ کے حوالے سے پاکستان اور کورین ٹیموں کی پریس کانفرنس ہوئی۔ کورین ٹینس ٹیم کے نان پلینگ کپتان جائے سک کیم نے کہاکہ پاکستان کیخلاف ڈیوس کپ ٹائی کیلئے بھرپور محنت کی ہے ،پلیئرز نے کوریامیں بھی ٹریننگ کیمپ میں ڈیوس کپ ٹائی پر فوکس کیا ، پاکستان سے سخت مقابلہ متوقع ہے۔

 

انہوں نے کہاکہ پاکستانی ٹیم باصلاحیت کھلاڑیوں پر مشتمل ہے ، ڈیوس کپ ٹائی میں پاکستان کیخلاف گراس کورٹ میں فوکس سنگلز میں ہوگاکیونکہ کورین ٹیم نوجوان پلیئرز پر مشتمل ہیں اور پاکستانی ٹیم میں عمر دراز پلیئرز شامل ہیں۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پاکستان میں سیکیورٹی کے کوئی مسائل نہیں ،ڈیوس کپ میچز کی سیکیوٴرٹی انتظامات سے مطمئن ہے۔

 

 

پریس کانفرنس کے دوران ٹینس اسٹار اعصام الحق اور پاکستان ڈیوس کپ ٹیم کے نان پلینگ کپتان حمید الحق کا کہنا تھا کہ کورین ٹیم پاکستان سے زیادہ بہتر ہے ، کورین ٹیم میں شامل تمام پلیئرز ورلڈ رینکنگ میں شامل ہے لیکن اس کے باوجود ہوم گراونڈ میں ٹائی ہونے کا بھر پور فائدہ اٹھانے کی کوشش کرینگے۔ انہوں نے کہاکہ آئی ٹی ایف کے قوانین میں تبدیلی پاکستان کیلئے فائدہ مند ثابت ہونگے اور تھری سیٹ میں ٹائی کے فیصلہ پاکستان کیلئے سود مند ثابت ہو سکتا ہے۔

اعصام الحق نے کہا کورین ٹیم کیخلاف جارحانہ کھیل سے اپ سیٹ کرنے کی پوری کوشش کرتے ہوئے ڈیوس کپ میں میزبان ملک کی کامیابی کا 20سالہ ریکارڈ برقرار رکھنے کی کوشش کرینگے۔

مزید دیکھیں

متعلقہ مضامین