شادی کی خبروں کے 72 گھنٹے بعد عمران خان کا بیان سامنے آگیا

عمران خان نے شادی سے متعلق خبروں کے 3 دن بعد خاموشی توڑ دی, اپنے ٹویٹر پیغام میں انہوں نے کہا کہ پچھلے 72 گھنٹوں سے ایسے لگ رہا ہے جیسے مجھ سے کوئی بہت بڑا گناہ سرزد ہوا ہو، ایک میڈیا چینل جیو کی رپورٹنگ سے لگا جیسے میں نے بہت بڑی غلطی کر دی ہو ,کوئی بتائے کہ کیا میں نے قومی خزانے پر ڈاکہ ڈالا؟ ماڈل ٹاون کی طرح قتل عام کا حکم دیا ؟ یا قومی راز بھارت کو فروخت کر دئیے؟؟ عمران خان نے اپنے خلاف جیو جنگ گروپ کی خبروں پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان کے خلاف میرشکیل اور نواز شریف کی ایما پر گھٹیا مہم چلائی گئی,جس کی پرواہ نہیں کیونکہ عزت اور ذلت کے واحد مالک رب العزت کی ذات ہے, مگر مجھے اپنے بچوں اور بشریٰ بیگم کے اہل خانہ کی فکر ہے جنہیں اس مہم کا نشانہ بنایا گیا,


عمران خان نے مزید کہا کہ نواز شریف اور میر شکیل یقین رکھیں کہ اس حملے سے انکے خلاف لڑنے کا ان کا عزم مزید پختہ ہوا ہے، شریف خاندان کو پچھلے چالیس برسوں سے جانتا ہوں،اور ان کی نجی زندگیوں کی غلاظت سے بھی اچھی طرح واقف ہوں، مگر میں کبھی خود کو اتنا گراؤں گا نہ ہی اس غلاظت سے اپنے ہاتھ آلودہ کروں گا

عمران خان نے اپنے خیر خواہوں سے التماس کی ہے کہ میرے لئے اس ذاتی خوشی کی دعا کریں جس سے محرومی کا مجھے احساس ہے،

اس سے قبل تحریک انصاف نے جنگ اور جیو گروپ کی جانب سے عمران خان کے خلاف بے بنیاد خبریں نشر کرنے پر پیمراء اور پریس کونسل آف پاکستان سے رجوع کر لیا! تحریک انصاف دونوں اداروں کو ارسال کی گئی دراخواستوں میں موقف اپنایا کہ عمران خان کی شادی کے حوالے سے واضح اور غیر مبہم مؤقف پیش کئے جانے کے باوجود جیو/جنگ گروپ کی جانب سے عمران خان مخالف جھوٹ پر مبنی غیر اخلاقی پراپیگنڈہ مہم چلائی گئی,مانیکا خاندان کے افراد نے بھی اس مہم کے پیچھے کارفرما جھوٹ اور سازش کا پردہ چاک کیا مگر اس کے باوجود جیو نیوز نے انتہائی بے شرمی اور ڈھٹائی سے مہم جاری رکھی! تحریک نے مطالبہ کیا کہ پیمرا فوری طور پر جیو کی جانب سے جاری مہم کے خلاف کاروائی کرے جبکہ پریس کونسل آف پاکستان جنگ اور دی نیوز سے فوری جواب طلبی کرے،اداروں نے اپنا کام نہ کیا تو عدالت سے رجوع کیا جائے گا

مزید دیکھیں

متعلقہ مضامین